دنیا کے 78 ممالک نے رابطہ اسلامی کے تحفیظ قرآن پروگرام کی پذیرايی کی

رابطہ عالم اسلامی کے سیکریٹری جنرل ڈاکٹرمحمد بن عبدالکریم العیسیٰ نے پورے عالم میں قرآن کے نشر و اشا عت پر زور دیا

 

 مکہ مکرمہ  : رابطہ عالم اسلامی کے سیکریٹری جنرل ڈاکٹرمحمد بن عبدالکریم العیسیٰ نے اردو زبان میں جاری ایک بیان میں قرآن پاک کی بے حرمتی کو ناقابل برداشت قراردیا۔ انہوں نے سویڈن میں قرآن پاک کی بے حرمتی کے حالیہ واقعہ کی شدید مذمت کی۔ رواں سال کے ماہ اگست میں سویڈن کے شہر مالمو میں قرآن پاک کو جلانے کا افسوسناک معاملہ سامنے آیا تھا۔ جس کے خلاف ہزاروں کی تعداد میں مسلمان سڑکوں پر اتر آئے اور زبردست احتجاج کیا تھا۔ جس کے بعد سویڈن کی حکومت نے فوری کارواءی کرتے ہوءے اس بات کو یقینی بنایا تھا کہ ایسا حادثہ دوبارہ نہ ہو۔ ڈاکٹرمحمد بن عبدالکریم العیسیٰ نے سویڈین کی حکومت کے

 

اقدامات کی پذیراءی اور ہر طرح کی نسل پرستی اور نفرت کو خارج کرتے ہوءے کہ اکہ وہ حادثہ سویڈین کی مہذب شہریوں کے احساسات کی ترجمانی نہیں کرتا۔انہوں نے بتایا کہ رابطہ کے زیر اہتمام  تحفیظ القرآن کیلئے ایک منظم ادارہ قائم ہے جس کا نام بین الاقوامی تحفیظ القرآن آرگنائزیشن ہے ، اس ادارہ کا بنیادی مقصد پورے عالم میں  قرآن پاک کے معانی و تفسیر سے نئی نسل کو آگاہ کرنا ہے۔ رابطہ کا یہ تحفیظ پروگرام  78 ممالک میں چل رہاہے،

جن ممالک سے رابطہ کی پذیراءی ہوءی ہے۔ اسی پروگرام کے تحت ان ممالک کے  68 کالجوں اور انسٹی ٹیوٹ میں قرآن کی درسگاہیں بھی چل رہی ہیں، جہاں 7500 طلبا و طالبات درس قرآن حاصل کررہے ہیں۔اس پروگرام کے تحت  اب تک 61275 قاری فارغ ہو کرنکل چکے ہیں، جن میں 5055 منظور شدہ  اور مستند ہیں۔ اسی طرح اس ادارہ نے 193 تربیتی کورسز کا بھی انعقاد کیا ، اس کے علاوہ اب تک جاری وظاءف کی تعداد تقریباٰ 3000 پہنچ چکی ہے۔

 
رابطہ عالم اسلامی کے سیکریٹری جنرل ڈاکٹرمحمد بن عبدالکریم العیسیٰ کے مطابق ان کی پوری توجہ اس بات پر ہے کہ پوری دنیا میں قران کی تلاوت، تحفیظ، افہام وتفہیم اور نشرواشاعت بہتر طریقے سے ہوسکے، یہی وجہ ہے کہ وہ ان تمام مواقع کے استعمال کے حق میں ہیں جو عوام میں کلام الہی کی صحیح فہم پہنچانے کو یقینی بناءے تاکہ ان میں اخوت ، نظریاتی و فکری ہم آہنگی پیدا ہوسکے اوران کے درمیان کسی قسم کا تصادم نہ ہو۔


رابطہ عالم اسلامی کے سیکریٹری جنرل ڈاکٹرمحمد بن عبدالکریم العیسیٰ ٗ جوکہ سعودی سپریم علماء کونسل کے رکن اورعالمی تنظیم براءے قراء کے سربراہ ہیںٗ نے بتایاکہ ہمارے اداہ کا مرکزی پیغام قرآن کی خدمت ہے اور اسے اس طرح پڑھنا ہے جس طرح رسول پاک صلی اللہ علیہ وسلم نے پڑھنا سکھایاہے۔ جس میں تمام شروط و ضوابط شامل ہیں۔ اس میں حفظ قرآن کریم ، تجوید کے ساتھ حسن قرات اور فہم قرآن شامل ہے۔ 


ڈاکٹرمحمد بن عبدالکریم العیسیٰ کے زیر قیادت خدمت الوحین فورم کی ایک میٹنگ میں کيی اہم سفارشات منظورہويی ہیں۔ جس میں مذہبی تقاریر پرزور، کتاب وسنت کے درست منہج کا التزام اورایسے طریقوں کو اپنانا شامل ہیں جس میں مختلف تہذیبیں ایک دوسرے کے قریب آسکیں۔ انہوں نے کتاب وسنت کی عالمی تنظیم اورتعلیم قرآن کے میدان میں فعال جماعتوں سے اپیل کی ہے کہ وہ ایسے پروگرامز تشکیل دیں جو کتاب وسنت کی افہام وتفہیم پر مشتمل ہوں، تاکہ وہ طلبا وطالبات اور عام مسلمانوں کے شب و روز کی سرگرمیوں کا حصہ بن سکے۔

اس فورم نے جدید ٹکنالوجی کے استعمال کے ليے حوصلہ افزاءی، خاص طورپر کتاب و سنت کی خدمت کے ليے سوشل میڈیا کے استعمال کے وسیلے سے نوجوانان امت کو کتاب وسنت سے جوڑنے اور اس میں ان کی تواناءی صرف کرنے کی تلقین کی۔

اس کے علاوہ ایک ایسا پلیٹ فارم بھی تشکیل دیاجاءے جہاں قرآن کریم اورسنت نبوی سے متغلق اپلیکیشنز اورپروگرامز تشکیل دءے جا سکیں۔رابطہ عالم اسلامی کے سیکریٹری جنرل ڈاکٹرمحمد بن عبدالکریم العیسیٰ نے اپنی ذمہ داریوں کے درمیان متعدد اسلامی ممالک کو کتاب اللہ  پر توجہ مرکوز کرنے، اس کی بہتر شکل میں حفاظت، نوجوان نسل کے درمیان اس کی نشرو اشاعت کے ليے آمادہ کیا تاکہ بنی نوع انسان کے درمیان رواداری اور باہمی افہام وتفہیم پھیل سکے۔

0 comments

Leave a Reply