26/09/2017


اتراکھنڈ میں پہلا طبیہ کالج قائم، سی سی آئی ایم نے منظوری دی

نئی دہلی: آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس کے سکریٹری جنرل ڈاکٹر سید احمد خاں نے جاری بیان میں بتایا ہے کہ ریاست اتراکھنڈ میں پہلے طبیہ کالج کے قیام سے طب یونانی کی ترویج و ترقی اب یقینی ہوگئی ہے۔ یہ ڈاکٹر محمد ہارون  ، صدر، آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس، اتراکھنڈ کی کو ششوں کا ثمرہ ہے ۔

واضح ہو کہ گزشتہ برسوں سے آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس نے اپنی جدوجہد سے ممبر سی سی آئی ایم (یونانی) محکمہ آیوش، حکومت ہند کا عہدہ بحال کیا اور خوشی کی بات ہے کہ اس وقت ڈاکٹر محمد ہارون ریاست کے پہلے ممبر سی سی آئی ایم منتخب ہوئے اور ان کی کوششوں سے طبیہ کالج کے قیام جیسا عظیم کارنامہ بھی انجام پذیر ہوا جسے سی سی آئی ایم نے منظوری بھی دے دی ہے۔ مذکورہ طبیہ کالج ’اترانچل یونانی میڈیکل کالج اینڈ ہاسپٹل‘ کے نام سے ضلع ہری دوار میں واقع مصطفی آباد میں قائم ہوا ہے۔

اور یہ امر بھی خوشی کا ہے کہ داخلے بھی شروع ہوچکے ہیں۔ آل انڈیا یونانی طبّی کانگریس نے امید ظاہر کی ہے کہ ڈاکٹر محمد ہارون کی قیادت میں اتراکھنڈ میں واقع محکمہ آیوش کے اندر ڈپٹی ڈائرکٹر یونانی کا تقرر بھی جلد عمل میں آجائے گا نیز یونانی میڈیکل آفیسرز کے تقرر کی راہ بھی ہموار ہوگی۔ 





دیگر خبروں

2
3
4